سینیٹر میرحاصل بزنجو انتقال کرگئے

سینیٹر میرحاصل بزنجو انتقال کرگئے

کراچی ( اے آئی اے ) سینیٹر میرحاصل بزنجو انتقال کرگئے تفصیلات کے مطابق نیشنل پارٹی کے مرکزی رہنما سینیٹر میر حاصل بزنجو کراچی میں انتقال کر گئے ان کی عمر 63 برس تھی ان کی تدفین ان کے آبائی علاقے نال میں کی جائے گی ، نیشنل پارٹی نے دس روزہ سوگ کا اعلان کیا ہے ترجمان نیشنل پارٹی جان بلیدی کے مطابق میرحاصل خان بزنجو گزشتہ کچھ مہینوں سے پھیپڑوں کے سرطان میں مبتلا ہونے کی وجہ سے علیل تھے میر حاصل خان بزنجو 3 فروری 1958ء کو بلوچستان کے علاقے خضدار میں پیدا ہوئے تھے ان کے والد والد میر غوث بخش بزنجو کو صوبے کا پہلا گورنر ہونے کا اعزاز حاصل ہے انہوں نے 1975ء میں کوئٹہ سے میٹرک تک تعلیم حاصل کی جس کے بعد انہوں نے اعلیٰ تعلیم کیلئے کراچی کا رخ کیا میر حاصل بزنجو نے 1989ء میں اپنے والد کے انتقال کے بعد سیاست کے میدان میں قدم رکھا اور پاکستان نیشنل پارٹی کا حصہ بنے۔ 1990ء میں پارٹی ٹکٹ پر پہلی بار انتخابات میں حصہ لیا اور رکن قومی اسمبلی منتخب ہوئے۔ وہ کئی بار جیل کے سلاخوں کے پیچھے بھی گئے 2003ء میں انہوں نے نئی سیاسی جماعت نیشنل پارٹی میں شمولیت اختیار کر لی۔ 2008ء میں عام انتخابات کا بائیکاٹ کیا اور 2009 میں سینیٹر منتخب ہوئے میر حاصل خان بزنجو 1990 میں پہلی مرتبہ قومی اسمبلی کے رکن منتخب ہوئے، جبکہ 1997 میں وہ دوبارہ قومی اسمبلی کے رکن بنے میر حاصل بزنجو نے 2003 میں بلوچستان نیشنل ڈیموکریٹک پارٹی (بی این ڈی پی) کی بنیاد رکھی، بعد میں جس کا نام تبدیل کرکے نیشنل پارٹی رکھا گیا میر حاصل بزنجو 2014 نیشنل پارٹی کے صدر بنے ، 2015 میں دوبارہ سینیٹر بنے ، 2016 میں نوازشریف کی حکومت میں پورٹ اینڈ شپنگ کے وفاقی وزیر بھی رہے

About author