قومی اسمبلی میں آرمی ، نیوی اور فضائیہ ایکٹ ترمیمی بل کثرت رائے سے منظور

قومی اسمبلی میں آرمی ، نیوی اور فضائیہ ایکٹ ترمیمی بل کثرت رائے سے منظور

اسلام آباد ( اے آئی اے ) قومی اسمبلی میں آرمی ، نیوی اور فضائیہ ایکٹ ترمیمی بل کثرت رائے سے منظور کر لیا گیا ہے تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر دفاع پرویز خٹک نے آرمی ایکٹ 1952 میں ترمیم کا بل ایوان میں پیش کیا۔ سپیکر قومی اسمبلی نے پاک آرمی، پاک نیوی، پاک ایئر فورس ایکٹس میں ترامیم کے بلز کی شق وار منظوری لی۔ اس موقع پر وزیراعظم عمران خان بھی ایوان میں موجود تھے۔ قومی اسمبلی کا اجلاس سروسز ایکٹ ترمیمی بل کی منظوری کے بعد بدھ کی شام 4 بجے تک ملتوی کر دیا گیا ہے پاکستان مسلم لیگ اور پاکستان پیپلزپارٹی نے بل کی حمایت کی جبکہ جماعت اسلامی اور جے یو آئی نے بل کی منظوری میں حصہ نہیں لیا تاریخ ساز قانون سازی کیلئے اسپیکر اسد قیصر کی زیر صدارت قومی اسمبلی کا اجلاس ہوا ، پرویز خٹک نے پیپلز پارٹی سے بل کی ترمیم سے متعلق تجاویز واپس لینے کی درخواست کی جس پر پیپلز پارٹی نے آرمی ایکٹ ترمیمی بل کے لئے اپنی ترامیم واپس لے لیں

About author